No Image
Facebooktwittergoogle_pluslinkedin

پاکستانی طیارے، 5 بڑے حادثے

|
دسمبر 10, 2016


Facebooktwittergoogle_pluslinkedin
پاکستانی طیاروں کے مختلف حادثوں میں 1965 سے لے کر اب تک 1000سے زائد افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔ سب سے زیادہ حادثوں کا شکار ہونے والا طیارہ پی آئی اے کا فوکر ایف – 27 رہا۔ اس دوران سال 2010 بد ترین سال رہا جس میں سب سے زیادہ حادثے پیش آئے جن میں تقریباً 185 افراد جان کی بازی ہار گئے۔ 1965 سے اب تک پاکستانی طیاروں کو پانچ بڑے حادثات پیش آئے جن میں 700 سے زائد افراد جاں بحق ہوئے۔

مئی 20، 1965

پی آئی اے کی فلائٹ 707 کا طیارہ بوئنگ 720 کراچی سے پہلی مرتبہ لندن کے لئے روانہ ہوا۔ درمیان میں اس طیارے کو سعودی عرب کے دہران انٹرنیشنل ائیرپورٹ، مصر کے "کائرو" ائیرپورٹ اور سوئٹزرلینڈ کے جینیوا ائیرپورٹ پر رکنا تھا۔ مگر کائرو ائیرپورٹ پر لینڈ کرتے ہوئے یہ طیارہ ضرورت سے زیادہ تیزی سے نیچے آیا اور گر کر تباہ ہو گیا جبکہ طیارے کے اس تیزی سے نیچے آنے کی وجہ معلوم نہ ہو سکی۔ طیارے میں عملے سمیت 127 لوگ سوار تھے جن میں سے 121 افراد جاں بحق ہوئے جبکہ چھ افراد بچ گئے۔

نومبر 26، 1979

پی آئی اے کا طیارہ بوئنگ 707 سعودیہ سے حاجیوں کو لے کر کراچی آرہا تھا۔ یہ طیارہ اڑان بھرنے کے کچھ دیر بعد ہی آگ لگنے کی وجہ سےحادثے کا شکار ہوا اور طائف کے قریب گر کر تباہ ہو گیا۔ اس میں موجود 156 مسافر جاں بحق ہو ئے ۔ان میں دو لوگوں کے علاوہ جہاز کے عملے سمیت 154 پاکستانی سوار تھے جن میں 111 پاکستانی حج کر کے واپس آرہے تھے۔ اس طیارے میں آگ لگنے کی بھی درست وجہ معلوم نہ ہو سکی۔

ستمبر 28، 1992

پی آئی اے کی فلائٹ 268 کا طیارہ ائیر بس – اے300 کراچی سے نیپال کے شہر کھٹمنڈو کے لئے روانہ ہوا۔ کھٹمنڈو ائیرپورٹ ایک ایسے علاقے میں واقع ہے جہاں چاروں طرف اونچی پہاڑیاں ہیں ۔ اس طیارے کا پائلٹ لینڈنگ سے قبل مقرر کردہ بلندی کو برقرار نہ رکھ سکا جس کی وجہ سے طیارہ بادلوں سے ڈھکی پہاڑی سے ٹکرا کر تباہ ہو گیا۔طیارے میں سوار تمام 167 افراد جاں بحق ہوئے۔

جولائی 28، 2010

پاکستان کی نجی ائیر لائن ائیر بلو کے ائیر بس 321 طیارے کو کراچی سے اسلام آباد جانا تھا۔ طیارہ لینڈنگ سے قبل مر گلہ کی پہاڑیوں سے ٹکرا کر تباہ ہوا۔ اس طیارے کے تباہ ہونے کی وجہ موسم کی خرابی بتائی گئی جس کی وجہ سے طیارے نے توازن کھو دیا۔ طیارے میں سوار 152 افراد جاں بحق ہوئے۔

اپریل 20، 2012

بھوجا ائیر کی فلائٹ213 کا طیارہ بھوجا ائیر بس 737 کراچی کے جناح انٹرنیشنل ائیرپورٹ سے اسلام آباد کے لئے روانہ ہوا۔ یہ بھوجا ائیرلائن کی کراچی سے اسلام آباد کے لئے پہلی پرواز تھی۔ یہ طیارہ موسم کی خرابی کے باعث اسلام آباد کے قریب گر کر تباہ ہو گیا۔طیارے میں سوار 121 مسافروں سمیت عملے کے 6 افراد جاں بحق ہوئے۔
اپنی رائے کا اظہار کریں

. .

Social media & sharing icons powered by UltimatelySocial