اور پاکستان کرکٹ یتیم ہوگئی

|
مئی 15, 2017


Facebooktwittergoogle_pluslinkedin
کرکٹ کا کھیل ٹیم گیم ضرور ہے لیکن کپتان مصباح الحق اور یونس خان کی ریٹائرمنٹ کے بعد پاکستان کرکٹ ٹیم یتیم ہوگئی ہے۔ دونوں کھلاڑیوں نے ایک ساتھ کرکٹ کو خیرباد کہہ کر نہ صرف ایک مثال قائم کی بلکہ آخری میچ میں کامیابی حاصل کرکے فتح کے ساتھ کیرئیر کا اختتام کیا۔ ایک ایسے ملک میں جہاں لوگ کرسی چھوڑنے کو تیار نہیں ہوتے، ان دونوں کھلاڑیوں نے آنے والی نسلوں کے لئے ایک ایسی روایت چھوڑی ہے جس کی مثال نہیں ملتی۔
کیا پاکستان کرکٹ ٹیم ان دونوں عظیم کھلاڑیوں کی غیر موجودگی میں ایسی ہی کارکردگی دکھا سکے گی؟ کیا نوجوان کھلاڑی اپنے سینئیر کھلاڑیوں کی غیر موجودگی میں وہ سب کر پائیں گے جس کی ان سے توقع ہے؟ اسد شفیق اور اظہر علی کے ساتھ ساتھ یہ ذمہ داری بابر اعظم پر بھی آتی ہے جو ٹیم میں نئے ضرور ہیں لیکن ایک منجھے ہوئے کھلاڑی کی طرح کھیلتے ہیں۔ سلیکٹرز اور ٹیم مینجمنٹ کو چاہئے کہ اظہر علی کو ایک بار پھر نمبر تین، بابر اعظم کو نمبر چار اور اسد شفیق کو نمبر پانچ پر بھیچ کر مڈل آرڈر کو مضبوط کریں۔ دو قابل اعتماد اوپنرز کو سلیکٹ کریں جس میں سے ایک کا نام سمیع اسلم ہونا چاہئے، نمبر چھ پر سرفراز احمد اور نمبر سات پر ایک آل راونڈر کی سلیکشن سے ٹیم کا بیلنس آوٹ نہیں ہوگا۔ اس کے بعد آپ کے وہی بالرز جنہوں نے آپ کو ویسٹ انڈیز میں ٹیسٹ سیریز جتوانے میں اہم کردار ادا کیا۔
ٹیم میں وہاب ریاض اور راحت علی جیسے ناکارہ کھلاڑیوں کو ضرورت نہیں، شاداب خان کو بھی ٹیسٹ اسکواڈ سے دور ہی رکھا جانا چاہئے۔ حسن علی اور محمد عباس سے اپنی اہمیت خود ثابت کی اور دونوں کو ریورس سوئنگ کرتا دیکھ کر ہر پاکستانی ہی خوش ہوا ہوگا۔ سیریز میں 25 وکٹیں حاصل کرنے والے یاسر شاہ بھرپور فارم میں نظر آئے، محمد عامر نے بھی پراعتماد انداز میں بالنگ کرکے ناقدین کے منہ بند کردئیے۔
ٹیم کی سلیکشن، نئے کپتان کی تقرری اور کوچ کی منظوری  ایک طرف، مصباح الحق اور یونس خان کی کمی سب کو ہی محسوس ہوگی، جب 40 رنز پر 3 وکٹیں گریں گی، تو کون مرد بحران ٹیم کو آکر سنبھالے گا۔ جب ٹاپ آرڈر ناکام ہوگا تو کون آکر سنچری اسکور کرے گا؟ کس کھلاڑی میں اتنا دم ہوگا کہ دنیا کے بہترین بالرز کے خلاف چیونگ گم چبا کر اور مسکرا کر بیٹنگ کرے؟ یہ دونوں عظیم کرکٹرز ہمارے ہیرو تھے، ہیں اور رہیں گے، محمد یوسف جیسے بیزار کرکٹ مبصر چاہے کچھ بھی کہیں، یونس اور مصباح نے کرکٹ کو جس طرح فاتحانہ انداز میں چھوڑا، وہ کسی کسی کو نصیب ہوتا ہے۔
اپنی رائے کا اظہار کریں

. .

Social media & sharing icons powered by UltimatelySocial